gototopgototop
We have 20 guests online

پاکستان

مرضیہ افخم جنرل سلیمانی عراق میں نہیں /عراقی عوام دہشت گردوں کو ختم کردیں گے PDF Print E-mail
Written by rizvi   
Thursday, 26 June 2014 14:45

رپورٹ کے مطابق اسلامی جمہوریہ ایران کی وزارت خارجہ کی ترجمان نے عراق میں ایرانی اہلکاروں کی موجودگی پر مبنی خبروں کی سختی کے ساتھ تردید کرتے ہوئے کہا ہے کہ عراق میں ایران کا کوئی اہلکار موجود نہیں ہے اور بیت المقدس بریگیڈ کے کمانڈر جنرل سلیمانی بھی عراق میں نہیں ہیں۔

ترجمان نےکہا کہ عراق میں موجود  دہشت گردوں کو بعض علاقائی ممالک  کی پشتپناہی حاصل ہے اور دہشت گردی ایک دن ان کے دامنگير بھی ہوجائے گي محترمہ افخم نے کہا کہ بعض ممالک دہشت گردوں سے اپنے مفادات کے لئے بھر پور استفادہ کررہے ہیں اور دہشت گردوں کے بہانے عراقی حکومت سے باج اور ٹیکس وصول کرنے کی کوشش کررہے ہیں۔ ترجمان نے کہا کہ دہشت گرد جمہوریت کے دشمن ہیں اورعراقی عوام کے ووٹوں کو وہ اپنی گولیوں کا نشانہ بنانے کی کوشش کررہے ہیں لیکن دہشت گردوں کو عراقی عوام اور حکومت کے سامنے شکست و ناکامی کا سامنا کرنا پڑےگا۔

ترجمان نےکہا کہ عراقی عوام اور حکومت عراق میں جاری دہشت گردی کو خود ہی ختم کردیں گے اور انھیں کسی دوسرے ملک کی حمایت کی ضرورت نہیں ہے۔

ترجمان نےکہا کہ عراقی حکومت نے ابھی تک کسی امداد کی درخواست نہیں کی اگر کوئی اسی درخواست کی گئی تو اس پر عراق و ایران کے باہمی روابط کی روشنی میں غور کیا جائےگا۔ ترجمان نےکہا کہ عراق میں شیعہ و سنی اور دیگر مذاہب و فرق کے افراد باہم متحدہ ہیں اور وہ ملکر دہشت گردوں کا مقابلہ کررہے ہیں اور عراقی عوام اور قبائل کے درمیان اتحاد عراق کی عزت و عظمت کا مظہر ہے۔

 

FORM_HEADER


FORM_CAPTCHA
FORM_CAPTCHA_REFRESH