gototopgototop
We have 50 guests online

پاکستان

سن باتھ ،کینسر اور نشے کا موجب ہوسکتا ہے ، ایک نئی تحقیق PDF Print E-mail
Written by alvi   
Sunday, 22 June 2014 14:51

ایک نئی ریسرچ کے نتائج کے مطابق کسی انسان کا وقفے وقفے سے لیکن تواتر کے ساتھ الٹرا وائلٹ شعاعوں کا سامنا کرنا، جیسا کہ غسل آفتابی کے موقع پر ہوتا ہے،اینڈورفینز کے اخراج کو تیز تر کر دیتا ہے۔ اینڈورفیِنز عرف عام میں ایسے ہارمونز کو کہا جاتا ہے، جو انسانی جسم میں خوشی، طمانیت یا اچھے احساس کا باعث بنتے ہیں۔ اینڈورفِنز نامی ہارمونز انسانی جسم میں اسی طرح کام کرتے ہیں اور ان کے اثرات بھی اپنی نوعیت میں ویسے ہی ہوتے ہیں جیسے ہیروئن یا مارفین جیسے انتہائی نشہ آور کیمیائی مادوں کے۔ اس تحقیق کے دوران بنیادی طور پر ایک تجربہ گاہ میں غسل آفتابی اور الٹرا وائلٹ شعاعوں کے چوہوں پر اثرات کا مطالعہ کیا گیا لیکن محققین کا کہنا ہے کہ اس ریسرچ کے نتائج کا اطلاق انسانوں پر بھی اتنا ہی ہونا چاہیے جتنا کہ چوہوں پر۔ اس کا سبب یہ ہے کہ الٹرا وائلٹ شعاعوں کے سلسلے میں جلد کے حیاتیاتی رد عمل کے حوالے سے چوہوں اور انسانوں میں پائی جانے والی خصوصیات انتہائی حد تک یکساں ہیں

 

FORM_HEADER


FORM_CAPTCHA
FORM_CAPTCHA_REFRESH